اکشے کمار کی فلم "پیڈ مین" پر پاکستان میں پابندی

 اکشے کمار کی فلم "پیڈ مین" پر پاکستان میں پابندی

2/11/2018 6:28:10 PM :شائع کردہ

لاہور: بالی ووڈ اداکار اکشے کمار کی نئی فلم" پیڈ مین" کی پاکستان میں ریلیز پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔ اکشے کمار مشہورتو ایکشن اور کامیڈی کی وجہ سے ہیں لیکن اب ان کی توجہ سماجی مسائل کی جانب ہوگئی ہے اور گزشتہ کافی عرصے سے وہ ہٹ کر فلمیں بنانے کو ترجیح دے رہے ہیں ۔ گزشتہ برس ریلیز ہونے والی فلم " ٹوائلٹ ایک پریم کتھا" میں بھی بھارت میں بیت الخلا کی کمی اور اس حوالےسے پیدا ہونے والے مسائل کو اجا گر کیا گیا تھا۔اس فلم کو پوری دنیا میں سراہا گیا تھا ۔ اور اب اکشے کمار کی ایک اور فلم 9 فروری کو ریلیز ہوئی ہے۔ جس میں بھی ایکشن، رومانس یا کامیڈی کے بجائے خواتین کو درپیش مسائل کو زیر بحث لایا گیا ہے۔تاہم پاکستان میں "پیڈمین " کی نمائش پر پابندی لگا دی گئی ہے۔ وفاقی سنسر بورڈ نے " پیڈمین" کو این او سی جاری کرنے سے منع کرتے ہوئے فلم کو ملک بھر کے سینما گھروں میں ریلیز نہ کرنے کا اعلان کیا ہے۔ پنجاب فلم سنسر بورڈ کے ممبران نے بھی فلم کو کلیئرنس سرٹیفیکٹ جاری نہیں کیا۔ اس حوالے سے بورڈ کے ممبران کا کہنا ہے کہ متنازع موضوع پر بنائی گئی فلم کو سینما میں ریلیز کی اجازت نہیں دے سکتے۔ پنجاب سنسر بورڈ نے کہا کہ بورڈ کے تمام ممبران فلم کو دیکھتے ہوئے ہچکچاہٹ کا شکار ہوئے کیونکہ فلم میں خواتین کے اس مسئلے کو موضوع بنایا گیا تھا جس کے بارے میں عام طور پر کھلے عام بات نہیں کی جاتی ہے۔ دوسری طرف پاکستانی فلم ڈسٹری بیوٹرز نے مقامی پروڈیوسرز کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا ہے کہ یہ پروڈیوسرز بھارتی فلمیں خرید کر اسلامی ثقافت اور تاریخ کو تباہ و برباد کررہے ہیں۔