چوہدری نثار کو ٹکٹ دیں یا نہ دیں؟ مسلم لیگ ن میں اختلاف

چوہدری نثار کو ٹکٹ دیں یا نہ دیں؟ مسلم لیگ ن میں اختلاف

6/9/2018 6:22:09 PM :شائع کردہ

لاہور: سابق وزیرداخلہ چوہدری نثار کو الیکشن کیلئے ٹکٹ جاری کرنے پر مسلم لیگ ن کی مرکزی قیادت میں شدید اختلافات سامنے آگئے۔ مسلم لیگ ن عام انتخابات کیلئے پارٹی ٹکٹ کیلئے امیدواروں کے ناموں کا اعلان دو مراحل میں کیا جائے گا۔ جب کہ چوہدری نثار کو پارٹی ٹکٹ جاری کرنے کے معاملے پر مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف اور صدر شہباز شریف کے درمیان اختلاف پایا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن کے تاحیات قائد نواز شریف سابق وزیرداخلہ کو ٹکٹ نہ دینے کے فیصلے پر قائم ہے۔ جب کہ پارٹی صدر شہباز شریف کا موقف ہے کہ چوہدری نثار کوٹکٹ جاری کیا جائے۔ جب کہ انہیں ٹکٹ دینے کے حوالے سے تجویز سامنے آئی ہے کہ اگر چوہدری نثار کی جانب سے ٹکٹ کی درخواست نہ آئی تو انہیں ٹکٹ جاری نہیں کیا جائے گا۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کی قیادت کی جانب سے چوہدری نثار کی جگہ درخواست دینے والوں کو ٹکٹ جاری کرنے پر غور کیا گیا جب کہ اس حوالے سے پارٹی صدر شہباز شریف اور پارٹی کے قائد نواز شریف کے درمیان اختلاف موجود ہے۔ ذرائع کے مطابق مسلم لیگ (ن) کی جانب سے 2 مرحلوں میں پارٹی امیدواروں کا اعلان کیا جائے گا اور پہلے مرحلے میں 10 جون کو بعض امیدواروں کے نام سامنے لائے جائیں گے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ 70 فیصد ٹکٹ پرانے ارکان قومی و صوبائی اسمبلی کو دیے جائیں گے اور بعض پارٹی رہنماؤں کے خلاف مقدمات کی وجہ سے متبادل امیدوار رکھے جائیں گے جب کہ بعض حلقوں سے 3 سے 4 کورنگ امیدوار ہوں گے۔ ذرائع کے مطابق شہباز شریف اور مریم نواز کے 3 حلقوں سے الیکشن لڑنے کی تجویز سامنے آئی ہے جب کہ مریم نواز کو کراچی سے بھی الیکشن لڑانے کی تجویز ہے۔